حج ڈیپارٹ منٹ کو اقلیتی اموروزارت سے ہٹا کروزارت خارجہ میں بھیجاجائے

 اترپردیش اسٹیٹ حج کمیٹی سے دوبار مرکزی حج کےلیے منتخب سابق ممبر عرصہ دراز سےملک کےحاجیوں کےمفادات کی آواز اٹھانے والے رفیق الحجاج (حاجیوں ...

 اترپردیش اسٹیٹ حج کمیٹی سے دوبار مرکزی حج کےلیے منتخب سابق ممبر عرصہ دراز سےملک کےحاجیوں کےمفادات کی آواز اٹھانے والے رفیق الحجاج (حاجیوں کے دوست)نےملک کےوزیر اعظم جناب نریندر مودی صاحب سے پرزور مطالبہ کیاکہ حج ڈیپارٹ منٹ کو اقلیتی اموروزارت سے ہٹا کروزارت خارجہ میں
بھیجاجائے۔

مسٹر اعظمی نےاپنے میمورنڈم میں لکھاہے کہ میں دہلی سفر کے لائق نہیں ہوں ورنہ کسی ذرائع سے ملاقات کرکے آپ کو یہ میمورنڈم ہاتھ میں دیتا۔مسٹراعظمی نے کہاکہ حج کےمعاملات میں تقریباً مجھے بائیس سالوں سے یہ تجربہ رہاہے کہ حاجیوں کے لیےمیں نے پرامن اورقانون کے دائرے میں رہ کراورغیر سیاسی تحریک چلائی جس میں کامیابی بھی ملی، حج ایکٹ 2002ء بنوانے کے لیے بھی میں نےکئی پار پارلیمنٹ پربڑے سے بڑا مظاہرہ کیا اورلوگ سبھا وراجیہ سبھا میں بھی اس مانگ کواٹھوایا۔ جسے آجہانی اس وقت کے موجودہ پردھان منتری جناب اٹل بہاری  باجپئی منظورکرتے ہوئے ملک کے حاجیوں کو یہ تحفہ دیاتھا واضح رہے کہ اس وقت راجیہ سبھا میں ان،ڈی،اے حکومت کی اکثریت نہیں تھی مگر پھر بھی کانگریس اوراپوزیشن کی سیاسی جماعتوں نے اس ایکٹ کےڈرافٹ کے بہتری کودیکھتے ہوئے راجیہ سبھا میں بغیر بحث کے منظور کرلیا اورایکٹ 2002ء پارلیمنٹ  کی اسٹینڈنگ کمیٹی کے حوالے کردیااورکچھ ماہ بعد غوروغوض کرنے کے بعد 15؍مئی 2002ء کو یہ ایکٹ لوک سبھا میں پیش ہوا ،یاد رہے کہ 2002ء میں راجیہ سبھا میں سینٹرل آفس دہلی اورریزنل آفس ممبئی بنانے کی بات لکھی تھی مگراسٹینڈنگ کمیٹی نے حج کمیٹی کا سینٹرل آفس ممبئی رکھنے کی سفارش کردی جس میں کانگریس سمیت سبھی سیاسی جماعتوں کے پارلیمنٹ ممبروں نےلوک سبھا میں اعتراض کیا اور دلی دفتر لانے کی مانگ کی۔ مگر سرکار نے مانگ کو نہ مانگتے ہوئے سینٹرل دفتر ممبئی ہی رکھا۔
مسٹر اعظمی نے میمورنڈم کےآگے لکھاہے کہ حج کمیٹی 1959ء کےایکٹ سے بنی تھی جب سے حج وزارت خارجہ میں تھاایکٹ 2002ء میں بھی حج کووزارت خارجہ ہی میں رکھاگیا میرا یہ تجربہ رہا ہے کہ عازمین حج کی جتنی قدر غیر مسلم افسران اور غیرمسلم وزیروں نے کی اور حج کمیٹی کےمشوروں کو ترجیح دیتے تھے۔ اورحج ایکٹ 2002ء میں پورے ملک سے صوبائی حج کمیٹیوں سے9؍نمائندے آتے ہیں اور7؍نام مرکزی حکومت نام نیٹ کرتی ہے جس میں 3؍عالم دین کا ذکر ہے 2؍سنی اورایک شیعہ عالم کا ذکر ہے۔واضح رہے کہ حج ایکٹ مذہبی ادارہ ہے اس لیے علماوں کو نمائندگی دی گئی اورصوبائی حج کمیٹیاں کس طرح چلیں گی اوربنائی جائے گی اس میں حج ایکٹ 2002ء میں اس کابھی ذکر کیاگیاہے۔
میری جان کاری میں پورے دیش کےلوگوں نے ایکٹ2002ء کی تعریف کی مسٹر اعظمی نے کہاکہ جناب منموہن سنکھ جی کی حکومت میں اس وقت کے اقلیتی امورکےوزیر کے رحمان خان صاحب نے چند ممبر آف پارلیمنٹ سے جس میں آج کےاقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی صاحب نے بھی ان کے اس میمورنڈم پر دستخط  کیاتھا اس وقت وہ راجیہ سبھا کے ممبر تھے،حج کووزارت خارجہ سے ہٹاکر اقلیتی امور میں لانے کا مطالبہ کیا بہرکیف جناب منموہن سنکھ جی کی حکومت میں اس معاملہ کولےکر کافی اختلاف ہوا اوریہ فائل ٹھنڈے بستہ میں چلی گئی۔
مسٹراعظمی وزیر اعظم کے میمورنڈم میں کہاکہ 2014ء میں آپ کی سرکار بننے کےبعد پھر سے وہ فائل آج کے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی صاحب نے اپنے دل چسپی پر نکلوائی اور پی ایم او کےذریعہ کیبنیٹ میں ایک آڈر پاس کرالیا کہ حج وزارت خارجہ سے اقلیتی امور میں ٹرانسفر کیاجاتاہے جوکسی بھی طرح سے حاجیوں کے لیے صحیح نہیں تھا کیوں کہ 70% کام وزارت خارجہ کا اور 10% شہری ہوابازی ایئر انڈیا وغیرہ کا اور 20% مرکزی حج کمیٹی اورملک کی صوبائی حج کمیٹی کرتی ہیں۔1959 ء سے یہ روایت بھی رہی ہے اور یہ ایک اصولی بات بھی ہے حج ایک غیر ملکی کاسفر ہے اور وہ وزارت خارجہ میں ہی رہنا ضروری ہے۔ مسٹراعظمی نے اپنے میمورنڈم میں یہ بھی لکھا کہ حج جب سے اقلیتی امور میں آیاہے تب سے حج ایکٹ 2002ء کی کھلی خلاف ورزی ہورہی ہے اور7ماہ سے مرکزی حج کمیٹی نہیں ہے اورملک کے کئی صوبوں میں جیسے اترپردیش،مہاراسٹر،دہلی اورکئی صوباؤں میں صوبائی حج کمیٹیاں نہیں ہیں جس کو بنانے کی ذمہ داری وزارت حج کی ہوتی ہے۔
مسٹراعظمی نے یہ بھی کہاکہ 1959ء سے پارلیمنٹ ایکٹ سے حج کمیٹی چل رہی ہےلیکن کسی بھی وزیر حج نے اپنے نام کی تختی حج ہاؤس ممبئی میں  نہیں لگوائی کیوں کہ حکومت کےجوائن سکریٹری ہی سرکار کےکمیٹی میں نمائندے رہتے ہیں مگر حج منتری مسجد کےگیٹ سمیت کئی جگہ اپنے نام کا پتھر لگوایاہے جوروایت کےخلاف ہے اورمیرے علم میں غیر قانونی بھی ہے کیوں کہ حج کمیٹی آف انڈیا کادفتر  اورحج ہاؤس کی زمین ملک کےمسلمانوں کی امانت ہےاورحج کمیٹی کیسے کام کرے اس کے لیے سرکار کےایک آفیشیوں ممبر دیکھ  ریکھ کرتے ہیں۔
مسٹر اعظمی نےوزیر اعظم سے مؤدبانہ گزارش کی کہ بی جےپی سمیت کسی بھی سیاسی جماعت نے  سفر حج کےلیےسیاسی چشمہ نہیں لگایا اورحج کو مذہبی سفر کی نظر سے دیکھا اورسبھی حکومتوں نےاس کی عزت کی اوراس سفر کوآسان بنانے میں مدد کی مسٹر اعظمی نے کہاکہ مگر جب سے حج اقلیتی امور میں آیاہے اس میں مستقل غلط بیان بازی اور حاجیوں کو دھوکہ دینے کی بات کی جارہی ہے،حج ایکٹ2002ء کی خلاف ورزی مستقل ہورہی ہے مسٹر اعظمی نے پھر کہاکہ حج ایکٹ 2002ء بہت بہتر بناہے اس میں کسی بھی ترمیم کی قطعی ضرورت نہیں ہے انھوں نے وزیر اعظم سے مؤدبانہ گزارش کی کہ اس معاملہ کو طرزی طور پر دیکھنے کی زحمت کریں اورحج کو دوبارہ وزارت خارجہ میں بھیجنے کی زحمت کریں۔
واضح رہے کہ اس خط کی کاپی 
وزیرت خارجہ (حکومت ہند)
سعودی امبیسڈر
جوائن سکریٹری گلف
کوبھی بھیجی ہے۔
حافظ نوشاد احمداعظمی

COMMENTS

loading...
Name

Agra Article Bareilly Current Affairs DVNA Exclusive Hadees Hindi International Hindi National Hindi News Hindi Uttar Pradesh Home Interview Jalsa Madarsa News muhammad-saw Muslim Story National Politics Ramadan Slider Trending Topic Urdu News Uttar Pradesh Uttrakhand World News
false
ltr
item
TIMES OF MUSLIM: حج ڈیپارٹ منٹ کو اقلیتی اموروزارت سے ہٹا کروزارت خارجہ میں بھیجاجائے
حج ڈیپارٹ منٹ کو اقلیتی اموروزارت سے ہٹا کروزارت خارجہ میں بھیجاجائے
https://1.bp.blogspot.com/-n8hTCmhqGJU/YDT6CIyIX5I/AAAAAAAApBo/qeAzQW4JLMImSpQBjbrJrdgCgf1WYezrwCLcBGAsYHQ/s320/IMG-20210223-WA0048.jpg
https://1.bp.blogspot.com/-n8hTCmhqGJU/YDT6CIyIX5I/AAAAAAAApBo/qeAzQW4JLMImSpQBjbrJrdgCgf1WYezrwCLcBGAsYHQ/s72-c/IMG-20210223-WA0048.jpg
TIMES OF MUSLIM
http://www.timesofmuslim.com/2021/02/blog-post_541.html
http://www.timesofmuslim.com/
http://www.timesofmuslim.com/
http://www.timesofmuslim.com/2021/02/blog-post_541.html
true
669698634209089970
UTF-8
Not found any posts VIEW ALL Readmore Reply Cancel reply Delete By Home PAGES POSTS View All RECOMMENDED FOR YOU LABEL ARCHIVE SEARCH ALL POSTS Not found any post match with your request Back Home Sunday Monday Tuesday Wednesday Thursday Friday Saturday Sun Mon Tue Wed Thu Fri Sat January February March April May June July August September October November December Jan Feb Mar Apr May Jun Jul Aug Sep Oct Nov Dec just now 1 minute ago $$1$$ minutes ago 1 hour ago $$1$$ hours ago Yesterday $$1$$ days ago $$1$$ weeks ago more than 5 weeks ago Followers Follow THIS CONTENT IS PREMIUM Please share to unlock Copy All Code Select All Code All codes were copied to your clipboard Can not copy the codes / texts, please press [CTRL]+[C] (or CMD+C with Mac) to copy