سرسید اویرنیس فورم کی جانب سے 13 ویں قومی سمینار کا انعقاد

علی گڑھ: ۔  ضلع صنعتی و زرعتی نمائش علی گڑھ میں علی گڑھ”مہوتسو“میں سرسید اویرنیس فورم کی جانب سے سرسید، سماجی کام اور وباء موضوع پر تیرہواں ...

علی گڑھ:
۔  ضلع صنعتی و زرعتی نمائش علی گڑھ میں علی گڑھ”مہوتسو“میں سرسید اویرنیس فورم کی جانب سے سرسید، سماجی کام اور وباء موضوع پر تیرہواں قومی سیمینار کا انعقاد کیا گیاہے۔ اس موقع پر بولتے ہوئے مہمانِ خصوصی مسٹر وویک بنسل،سابق ایم۔ایل۔اے و ایم۔ایل۔ سی نے کہا کہ سرسید جیسے لوگ صدیوں میں پیدا ہوتے ہیں۔سرسید ایک ہمہ جہت شخصیت کی جیتی جاگتی مثال تھے۔وہ بہت ہی دور اندیش شخصیت کے مالک تھے اور انہوں نے مسلمانوں میں مغربی تعلیم کے فروغ کے لیے بہت کام کیا۔اپنے کلیدی خطبہ میں امراضِ دل کے ماہرمیڈیکل کالج اے۔ایم۔یو کے مشہورڈاکٹر پروفیسر عروج ربّانی نے کہا کہ سرسید نے ملک اور سماج کی ترقی کے لیے اپنی پوری زندگی وقف کردی۔ سرسید کی شخصیت ہمہ جہت تھی،وہ نہ صرف ایک مصنف،دانشور،سماجی لیڈر تھے بلکہ انہوں نے وباء کے دوران بہت کام کیا اور ایک نظیر قائم کردی۔ پروفیسر عروج ربّانی نے سرسید اویرنیس فورم کے صدر وبانی پروفیسر شکیل صمدانی کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہCovid-19 کے دوران اتنا شاندار سیمینارمنعقد کراکے سرسید سے اپنی محبت کا ثبوت دیا ہے۔

سرسید اویر نیس فورم کے قومی صدر اور ڈین فیکلٹی آف لا ء، اے۔ایم۔ یو نے کہاکہ راجہ جے کشن داس سرسید کے خیالات سے اتفاق نہیں رکھتے تھے لیکن جب انہوں نے دیکھا کہ سرسید شفاخانے میں ہندو مریضوں کی دل وجان سے تیمارداری کر رہے ہیں تو ان کو اپنے خیالات بدلنے پڑے اور اس کے بعد راجہ جے کشن داس سرسید کے دست راس بن گئے اور سائنٹفک سوسائٹی سے لے کر ہرجگہ ان کا ساتھ دیا۔ سرسید نے مسلم سماج سے بہت سی بدعات وخرافات کو ختم کرنے کی کوشش کی جس میں وہ کافی حد تک کامیاب رہے۔انہوں نے پارلیمنٹ میں چیچک کا ٹیکہ لگانے کا بل بھی پاس کرایا۔سرسید نے ’اسبابِ بغاوت ہند‘ لکھ سرکاری نوکری میں رہتے ہوئے بھی حکومت وقت کے خلاف آواز اٹھانے کا بھی راستہ دکھایا۔سرسید قانون کے بھی بہت بڑے واقف کار تھے اس لیے انہوں نے اپنی زندگی میں کالج میں شعبہئ قانون کی بھی بنیاد رکھی۔ پروفیسر صمدانی نے نمائش گراؤنڈ کے وسیع وعریض میدان کی تاریخ بتاتے ہوئے کہ یہ پورا میدان طلباء ایم۔اے۔او۔ کالج کے لیے سرسید کے کہنے پر دیا گیا تھا، لیکن افسوس کی بات ہے کہ ہم اس تاریخ کو بھول بیٹھے ہیں۔آخرمیں پروفیسر صمدانی نے مندوبین سے گزارش کی کہ وہ سرسید کی تعلیمات کو اپنی زندگی میں ڈھالیں اور تعلیم کی شمع کو ملک کے کونے کونے میں لے جائیں۔

سمینار کے مقررِ خاص ڈاکٹر شارق عقیل،چیف میڈیکل آفیسر،یونی ورسٹی ہیلتھ سروس نے کہا کہ سرسید سے بڑھ کر کوئی سیاسی دانشور نہیں ہو سکتا۔ ہمیں آج سرسید کی سوچ کو آگے بڑھانے کی ضرورت ہے۔میڈیکل کالج نے کرونا نے دوران جو کام کیا ہے وہ دنیا میں ہر جگہ سراہا گیا ہے۔انہوں نے پچھلے بارہ سالوں سے مستقل مجازی اور کامیابی سے سیمینار کرانے کے لیے پروفیسر صمدانی اور ان کی ٹیم کو مبارکباددی۔

اپنے صدارتی کلمات میں علی گڑھ کے میئر محمد فرقان نے کہا کہ سرسید کے لیے پورا ہندوستان ایک تھا۔انہوں نے کبھی بھی مذہب اور ذات کی بنیاد پر کوئی تفریق نہیں کی اور جو بھی کام کیا وہ سبھی کے لیے کیا۔ انہوں نے کہا کہ اگرہم سرسید کے خیالات کو اپنی زندگی میں ڈھالیں گے تو انشاء اللہ یقینا کامیاب ہوں گے۔

اس موقع پر فورم کی جانب سے زندگی کے مختلف شعبہ جات میں بہترین کار کردگی کے لیے پروفیسر محمد شمیم، میڈیکل کالج،اے۔ایم۔یو، ڈاکٹر نجم الدین انصاری، تاج چیرٹیبل ہاسپیٹل، جناب طارق حسین، اسسٹنٹ رجسٹرار، جناب پون وارشنی ڈائیریکٹر، پاتھ شالہ کلاسز،جناب ابو انس صدیقی،ڈائریکٹر، برکس پی ایم ٹی اکیڈمی، ڈاکٹر جمیل احمد،ایسوسی ایٹ ممبر انچارج، یونیورسٹی گیسٹ ہاؤس،کو ایکسلینس ایوارڈ(Excellence Award)  سے سرفراز کیا گیا۔

اس موقع پر مہمانِ اعزازی مسٹر خلیل چودھری، ڈایکٹرا،یم۔ اے۔ ایس فاؤنڈیش اور پیرا میڈیکل انسٹی ٹیوٹ،طالبہ سارا صمدانی نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ڈاکٹر نجم الدین انصاری نے عائشہ صمدانی اور سارا صمدانی کو بہترین تقریر اور نظامت کے لیے ایک ایک ہزار روپئے کا انعام دیا۔

سمینار کی نظامت ایم۔ بی۔ بی۔ ایس کی طلبہ عائشہ صمدانی نے کی۔ طالبہ ہبہ ظہیر نے مہمانوں کا استقبال کیا فورم کے سیکریٹری عبداللہ صمدانی،ایڈوکیٹ نے فورم کے اغراض ومقاصد بیان کئے۔ سارا صمدانی نے سرسید کی زندگی پر ایک اہم تقریر کی۔سمینار میں رپورٹر کے فرائض شیلجا سنگھ و فوزیہ نے نبھائے، رضیہ چوہان نے سرٹیفیکٹ انچارج کی ذمہ داری نبھائی۔اس سمینار کو کامیاب بنانے میں 

ڈاریکٹر،فیصل پی۔کے،ملاپورم سینٹر، ڈاکٹر حید رعلی صدر، لیگل اسٹڈیز،منگلایتن یونیورسٹی، ایڈوکیٹ شعیب علی، جنرل سیکریٹری، انشکا،اوراشو شرما، وکلپ شرما، شگفتہ یاسمین، راس مسعود، انس احمد، شبھم کمار، سلمان گوڑ، دانش اقبال۔ اُم کلثوم،سارم علی،منتو چوہان، نسیم احمد وغیرہ کا خصوصی تعاون رہا۔

مہمانان کو میمنوٹو اور سرٹیفکیٹ پروفیسر عروج ربّانی،محترمہ انجم تسنیم، پروفیسر محمد شمیم، پروفیسر شکیل صمدانی،ڈاکٹر خلیل چودھری اور ڈاکٹر شارق عقیل کے ذیعے دئے گئے۔ 


COMMENTS

loading...
Name

Agra Article Bareilly Current Affairs DVNA Exclusive Hadees Hindi International Hindi National Hindi News Hindi Uttar Pradesh Home Interview Jalsa Madarsa News muhammad-saw Muslim Story National Politics Ramadan Slider Trending Topic Urdu News Uttar Pradesh Uttrakhand World News
false
ltr
item
TIMES OF MUSLIM: سرسید اویرنیس فورم کی جانب سے 13 ویں قومی سمینار کا انعقاد
سرسید اویرنیس فورم کی جانب سے 13 ویں قومی سمینار کا انعقاد
https://1.bp.blogspot.com/-RS8k3TZf5Ws/YEBa2iH7pPI/AAAAAAAApWM/fUuzkmsbn58_XlBx9OVhRn8skDBK9fgPwCLcBGAsYHQ/s320/Prof.%2BShakeel%2BSamdani%2Bspeaking.JPG
https://1.bp.blogspot.com/-RS8k3TZf5Ws/YEBa2iH7pPI/AAAAAAAApWM/fUuzkmsbn58_XlBx9OVhRn8skDBK9fgPwCLcBGAsYHQ/s72-c/Prof.%2BShakeel%2BSamdani%2Bspeaking.JPG
TIMES OF MUSLIM
http://www.timesofmuslim.com/2021/03/13.html
http://www.timesofmuslim.com/
http://www.timesofmuslim.com/
http://www.timesofmuslim.com/2021/03/13.html
true
669698634209089970
UTF-8
Not found any posts VIEW ALL Readmore Reply Cancel reply Delete By Home PAGES POSTS View All RECOMMENDED FOR YOU LABEL ARCHIVE SEARCH ALL POSTS Not found any post match with your request Back Home Sunday Monday Tuesday Wednesday Thursday Friday Saturday Sun Mon Tue Wed Thu Fri Sat January February March April May June July August September October November December Jan Feb Mar Apr May Jun Jul Aug Sep Oct Nov Dec just now 1 minute ago $$1$$ minutes ago 1 hour ago $$1$$ hours ago Yesterday $$1$$ days ago $$1$$ weeks ago more than 5 weeks ago Followers Follow THIS CONTENT IS PREMIUM Please share to unlock Copy All Code Select All Code All codes were copied to your clipboard Can not copy the codes / texts, please press [CTRL]+[C] (or CMD+C with Mac) to copy